تازہ ترین
بنیادی صفحہ / آرچری / پی ایس کوچنگ سینٹر پشاور میںپختونخواآرچری کلب کے قایم کا مقصد پشاور میں اس کھیل کو فروغ دیناہے ،ساراخان

پی ایس کوچنگ سینٹر پشاور میںپختونخواآرچری کلب کے قایم کا مقصد پشاور میں اس کھیل کو فروغ دیناہے ،ساراخان

(سپورٹس لائف رپورٹر)تیراندازی کا شمار زمانہ قدیم کے کھیلوں میں ہوتا ہے شروع میں تیر اندازی کو شکار کرنے اور جنگوں میں بطور ہتھیار استعمال کیا جاتا رہا ہے جدید دور میں تیراندازی کو کھیلوں کے طور پر استعمال کیا جانے لگا ہے جیسے جیسے دنیا سائنس اور ٹیکنالوجی میں ترقی کرتی چلی گئی زمانہ قدیم کے کھیل یا تو ختم ہو کر رہ گئے یا پھر ان کا کوئی پرسان حال نہ رہا۔ پاکستان میں بھی کھیلوں کے حوالے سے صورتحال ایسی ہے کہ جو لوگ کھیل سے محبت کرتے اور اس کی ترقی کے لئے کام کرنا چاہتے ہیں ان کے راستوں میں رکاوٹیں کھڑی کی جا رہی ہیں ،تاہم پشاور اور صوبے کے مختلف اضلاع کے تعلیمی اداروں میں آرچری کھیل کوفروغ دینے کیلئے اپنی کلب کی سطح پر بھر کوششیں کررہے ہیں۔صوبائی دارالحکومت پشاور میں پی ایس بی کوچنگ سینٹر کے احاطے میں اس کھیل کے فروغ کیلئے قائم پختونخواآرچری کلب کی صدر اورآرچری کی مایہ ناز خاتون کھلاڑی ساراخان نے میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کہاکہ قلیل مدت میں پختونخواآرچری کلب نے کئی باصلاحیت کھلاڑی پیداکئے جنہوںنے قومی اور صوبائی سطح کے مختلف مقابلوں میں حصہ لیکر میڈلز جیتے ہیں ،انہیں توقع ہے کہ انشاء اللہ یہی کوششیں ایک دن ضروررنگ لائے گی ،اس کلب میں خواتین کھلاڑیوں کو بہترین ماحول میں ٹریننگ دی جارہی ہے امید ہے کہ مردوں کی طرح باصلاحیت خواتین آرچرزبھی سامنے آئینگے ،ساراخان کا کہناتھاکہ پشاور میں اس کھیل کا کافی ٹیلنٹ موجودہے اور انشاء اللہ اس ٹیلنٹ کو ضائع نہیں ہونے دیں گے،انہیں یہاں بنیادی ٹیلنٹ دینے کے بعد آرچری کی صوبائی ایسوسی ایشن کی وساطت سے ان کھلاڑیوں کومزید تربیت کیلئے بیرون ملک بھجوایا جائے گا مجھے یقین ہے کہ اگر ہمارے کھلاڑی اس کھیل میں محنت کریں ،تو بین الاقوامی مقابلوں میں ملک کیلئے میڈلز لا سکتے ہیں۔انہوںنے کہاکہ آرچری فیڈریشن کے صدر جنرل(ر)عارف حسن اور خیبر پختونخواآرچری ایسوسی ایشن کے صدر سید عاقل شاہ سمیت پی ایس بی کوچنگ سینٹر پشاور کے ڈائریکٹر ممتاز احمد ندیم کی کاوشوں اور سرپرستی سے پختونخوآرچری کلب اس کھیل کے فروغ میں سنگ میل ثابت ہوگا کیونکہ پشاور میں آرچری کلب قائم کرنا کسی چیلنج سے کم نہیں تھالیکن اللہ کے فضل سے اس میں نیک کام میںپہل کیا جس سے یقیناًنہ صرف پشاور بلکہ پورے خیبر پختونخوامیں آرچری کھیل کو فروغ ملے گا۔ انکاکہناتھاکہ ہماری کوشش ہو گی کہ پی ایس بی کوچنگ سینٹر پشاورکی طرح مختلف سکولوں میں بھی اکیڈمیز بنا کر وہاں کھلاڑیوں کو جدید سہولیات سے تربیت دیں،تاکہ اس کھیل کو بام عروج پر پہنچایاجاسکے ۔

تعارف: Azmat

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*