بنیادی صفحہ / دیگر سپورٹس / رمیز راجہ کے دبنگ فیصلے

رمیز راجہ کے دبنگ فیصلے

لاہور (عارف محمود خان، نمائندہ سپورٹس لائف) پاکستان کرکٹ بورڈ کے نئے چیئرمین رمیز راجہ نے کہا ہے کہ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ کے لیے آسٹریلوی کھلاڑی میتھیو ہیڈن اور جنوبی افریقا کے فاسٹ بولر ورنن فلینڈر کو پاکستان کرکٹ ٹیم کے کوچز بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے رمیز راجہ نے کہا کہ ہیڈن جارحانہ انداز کے پلئیر ہیں، فلینڈر کو بھی جانتا ہوں، دونوں اچھے نتائج دیں گے۔

نو منتخب چیئرمین پی سی بی نے کہا کہ بھارت سے کھیلنے کے لیے اس کے پیچھے نہیں بھاگیں گے، پاک بھارت کرکٹ ابھی تو ناممکن ہے، ہمیں بھی کھیلنے کی جلدی نہیں، کھیلوں کے معاملات سیاست کی وجہ سے دور چلے گئے۔

رمیز راجہ کا کہنا تھا کہ مصباح الحق اور وقار یونس کے استعفوں کی منظوری پچھلے بورڈ نے کی، اگر میں بھی ہوتا تو ان ہی لائنز پر سوچتا۔
رمیز راجہ نے مزید کہا کہ کوئی بھی کلب اگر ایک انٹرنیشنل کرکٹر پاکستان کو دے گا تو بورڈ اس کلب کا سارا خرچ اٹھائے گا، ویمن کرکٹرز کا بھی پے اسکیل اوپر لے کر جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ نیوزی لینڈ کیخلاف ہوم سیریز میں ڈی آر ایس کا نہ ہونا مجھے بھی برا لگا، میں اس پر ضرور بات کروں گا، میں نے ٹیم میں تبدیلی نہیں کی اس بات میں کوئی صداقت نہیں۔

انہوں نے کہا کہ میں جس پوزیشن پر آیا ہوں اس پر مجھے فیصلے کرنے ہیں ، پاکستان کے پاس 4 سے 5 میچ ونرز ہیں، ٹیم کو بیک کریں، ہفتہ دس دن میں آپ کو اچھی اچھی خبریں ملیں گی، فیصلے کروں گا غلطیاں ہوں گی لیکن مجھے بہت کام کرنے ہیں، چھ ماہ میں نتائج سامنے آئیں گے، میرے اور میرے بھائی کے نام پر لاہور اسٹیڈیم میں انکلوژر موجود ہے، میں یہاں ایسے نہیں آیا کچھ کرکے آیا ہوں۔ صرف تنقید نہ کریں، ہمیں سب کی سپورٹ کی ضرورت ہے۔

تعارف: عارف محمود خان

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*